محراب پندرانی کے قتل کے خلاف حب میں ریلی

Spread the love

حب۔پندرانی قبائل سے تعلق رکھنے والے معزز و معتبر شخصیت ڈاکٹر محمد اعظم پندرانی ودیگر معززین کی قیادت میں محراب پندرانی کے بہیمانہ قتل اور عدم گرفتاری کے خلاف حب ڈیم سے پرامن ریلی نکالی گئی جوکہ رپورٹرز پریس کلب حب پر پہنچ کر احتجاج ریکارڈ کرایا۔احتجاجی ریلی سے بشیر محمد حسنی اور پندرانی قبائل کے معززین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمارا یہ پر امن ریلی کسی قبائل اور سیاسی لوگوں کے خلاف ہرگز نہیں ہے یہ ریلی شہید محراب پندرانی کا قاتلوں کے عدم گرفتاری کے خلاف ہے ایک ہفتے سے زیاہ عرصہ ہوچکا ہے مگر اب تک قاتل گرفتار نا ہوسکے محراب پندرانی کے قتل کو قومی رنگ نا دیا جائے محراب پندرانی کے قاتلوں کا تعلق لہڑی قبائل سے ہیں۔ہمارے احتجاج کرنے کا مقصد یہ ہے کہ اصل قاتلوں کو گرفتار کرکےقانونی کاروائی عمل میں لائی جائے۔پندرانی قبائل کے معتبر اور معززین نے کہا کہ محراب پندرانی پر بیہمانہ تشدد کر کے اسے شہید کرنے والے ٹرانسپورٹروں کی گرفتاری تک احتجاج کا سلسلہ جاری رہے گا۔ہم وزیر اعلی بلوچستان جام کمال خان،گورنربلوچستان،وزیر داخلہ سے پر زور اپیل کرتے ہیں کہ شہید محراب کے قاتلوں کو جلد از جلد گرفتار کیاجائے۔ودیگر صورتحال اگر بلوچستان حکومت نے اس واقعے کے اصل مجرموں کے خلاف نوٹس نہیں لیا تو مختلف سیاسی پارٹیوں سے مل کر بلوچستان سمیت پاکستان کے کونے کونے میں احتجاج کرینگے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے