مارگلہ میں ‘آگ لگا کر’ ویڈیو بنانے والی ٹک ٹاکر کا وضاحتی بیا ن سامنے آگیا

Spread the love

اسلام آباد ،تفصیلات کے مطابق مبینہ طور پر مارگلہ پہاڑیوں اور جنگلات میں آگ لگاکر ٹک ٹاک ویڈیوز بنانے والی خاتون ڈولی آفیشل اپنے خلاف قانونی کارروائی کے آغاز کے بعد ایک وضاحتی بیان جاری کر دیا ہے جس میں ان کا کہنا ہے کہ ویڈیو میں نظر آنے والی آگ انہوں نے نہیں لگائی ڈولی کا کہنا تھا کہ جس طرح سے اس جعلی ویڈیو کو بغیر کسی تحقیق اور تفتیش کے وائرل کیا گیا ہے

ان کا کہنا تھا کہ افسوس ہے کہ واقعہ کی حقیقت جانے بغیر اتنا بڑا قدم اٹھانا، ایک ویڈیو کو اس طرح سے وائرل کرنا اور کسی بھی مشہور شخصیت کے لیے مسئلہ پیدا کرنا مایوس کن ہے

یہ بھی پڑھیے ،پراسرار دھاتی گیندوں کےآسمان سے گرنے پر لوگوں میں خوف و ہراس پھیل گیا

واقعہ کی حقیت سے متعلق تحقیق کرنی چاہیے تھی ڈولی کا کہنا تھا کہ اگر آپ کو محسوس ہوتا کہ اس معاملے میں کچھ اونچ نیچ یا گڑ بڑ ہے تو آپ میرے خلاف کوئی قدم اٹھاتے

خاتون ٹک ٹاکر کی مختصر ٹک ٹاک ویڈیو گزشتہ دنوں سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر وائرل ہوئی تھی، ’پسوڑی‘ گانے پر آگ کے سامنے سے گزرتے ہوئے دیکھا جا سکتا تھا جس پر صارفین کی جانب سے انھیں سخت تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے